donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Anwar Jalalpuri
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* قیام گاہ نہ کوئی نہ کوئی گھر میرا *

 

قیام گاہ نہ کوئی نہ کوئی گھر میرا 

ازل سے تا بہ ابد صرف اک سفر میرا 

خراج مجھ کو دیا آنے والی صدیوں نے 

بلند نیزے پہ جب ہی ہوا ہے سر میرا 

عطا ہوئی ہے مجھے دن کے ساتھ شب بھی مگر 

چراغ شب میں جلا دیتا ہے ہنر میرا 

سبھی کے اپنے مسائل سبھی کی اپنی انا 

پکاروں کس کو جو دے ساتھ عمر بھر میرا 

میں غم کو کھیل سمجھتا رہا ہوں بچپن سے 

بھرم یہ آج بھی رکھ لینا چشم تر میرا 

مرے خدا میں تری راہ جس گھڑی چھوڑوں 

اسی گھڑی سے مقدر ہو در بہ در میرا 

۸۸۸۸۸۸۸۸۸۸۸۸۸

 

 
Comments


Login

You are Visitor Number : 42