donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Dr Javed Jamil
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* محو_ حیرت ہیں ترے شہرہ_ آفاقی پر *
غزل
از ڈاکٹر جاوید جمیل
 
محو_ حیرت ہیں ترے شہرہ_ آفاقی پر
شک کسی کو نہیں رہبر تری قزاقی پر
 
منتظر بزم ہے لغزش ہو کوئی کب مجھ سے
کیوں نگاہیں نہیں رہتی ہیں کبھی باقی پر
 
ہر طرف پھیل گئی بزم میں افراتفری
تھی خطا بزم کی، الزام لگا ساقی پر
 
عقل کیا دے دی خدا تو نے ذرا انساں کو
وہ اٹھاتا ہے سوال اب تری خلاقی پر
 
موت آغوش میں لینے کو ہے اے چارہ گر
حرف آ ہی گیا آخر تری تریاقی پر
 
پاس  کوئی نہ ہنر اورنہ ہے محنت، نہ لگن   
اعتراضات ہیں رزاق کی رزاقی پر
 
بات پرواز کی جاوید کریں کیا تیری
محو_ حیرت ہیں تری فکر کی براقی پر
****
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 450