donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Dr Javed Jamil
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* منتظر ہوں میں جس کا وہ شباب کیا ہوگ *

 

غزل
 
از ڈاکٹر جاوید جمیل
 
منتظر ہوں میں جس کا وہ شباب کیا ہوگا
 با حجاب دیکھا ہے، بے حجاب کیا ہوگا
 
ماہتاب دیکھا تو یہ قیاس کر بیٹھا
اسکے حسن کے آگے ماہتاب کیا ہوگا
 
منتظر ہوں سننے کو خود زبان سے اس کی
 جانتا ہوں میں یوں تو کہ جواب کیا ہوگا
 
 جو ملے گا دوزخ میں، جان تو نہیں لے گا
اس عذاب سے بدتر وہ عذاب کیا ہوگا
 
 ہے کہاں حقیقت وہ، پھر بھی ہے حقیقت سا
اس کے خواب سے بڑھ کر کوئی خواب کیا ہوگا
 
ناقدین بیٹھے ہیں چیر پھاڑ کو جاوید
تجھ سے خود ترا اپنا احتساب کیا ہوگا 
++++++++++++++
 
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 479