donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Dr Javed Jamil
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* خوابوں کے جزیرے پر رہتا ہوں خوشی س *
 
غزل
 
جاوید جمیل
 
خوابوں کے جزیرے پر رہتا ہوں خوشی سے میں
چھپ کر کے حقیقت سے ملتا ہوں کسی سے میں
 
خود سے ہی تغافل میں اک عمر گزاری ہے
پہچان لے اب خود کو کہتا ہوں خودی سے میں
 
محبوب بتا تو ہی کیا یہ نہیں پاگل پن
اک شخص کی چاہت میں لڑتا ہوں سبھی سے میں
 
آوارہ  صفت ہوں میں دنیا کو پتہ ہے یہ
مانوس ہوں کیوں پھر بھی اک خاص گلی سے میں
 
مجبور ہوا ساقی اب اور نہیں دیتا
بیزار ہوا آخر اس تشنہ لبی سے میں
 
دیوانوں کی دنیا میں کیا کام ہے دانش کا
منزل کا پتہ دوں گا آشفتہ سری سے میں
 
مٹتی نہیں بیماری ، بس درد پہ قابو ہے
جاوید پریشاں ہوں اس چارہ گری سے میں
 
 
 
 

 

 
Comments


Login

You are Visitor Number : 442