donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Dr Javed Jamil
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* نہ کبھی ہوا خفا تو *
غزل
ڈاکٹر جاوید جمیل
 
(متفاعللن فعولن)
 
نہ کبھی ہوا خفا تو
نہ مرا کبھی ہوا تو
 
نہ مزید اب ستا تو
مرے پاس لوٹ آ تو
 
کبھی بول کر نظر سے
مرا حوصلہ بڑھا تو
 
 یہ کہے گا کب نہ جانے
میں ترا ہوں اور مرا تو
 
میں ترے بغیر کیا ہوں
ہے مرے بغیر کیا تو
 
مرا گھر پکارتا ہے
کہاں جا کے بس گیا تو
 
ملے ہم تو سب سنیں گے
میں ہوں لفظ اور نوا تو
 
ہے ثواب پیار میرا
ہے ثواب کی جزا تو
 
وہ ادا سے بولے "جاوید!
 میں غزل، غزل سرا تو"
******
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 479