rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Monazir Ashiq Harganvi
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* رنگین ہو گئی تھی فصل بہار ہر سو *
کہمن

ڈاکٹر مناظر عاشق ہرگانوی

وارفتگی

منظر: 

رنگین ہو گئی تھی فصل بہار ہر سو
احساس زندگی شیشے میں ڈھل رہا تھا
ساغر بکف تھا ساقی مستی چھلک رہی تھی
رندوں کی میکشی کا ارماں نکل رہا تھا
بے ہوش ہو رہے تھے کچھ ہوش کھو رہے تھے
گلرنگ تھیں فضائیں موسم مچل رہا تھا
تشنہ لبی کے سارے لمحات سو گئے تھے
بہکا ہوا تھا کوئی، کوئی سنبھل رہا تھا

 کہمن:

وارفتگی کا لیکن انجام دیکھنا ہے
ہر گام پر سفر کا پیغام دیکھنا ہے
دنیا کہیں تمہاری برباد ہو نہ جائے
خوشیوں کے دور میں بھی آلام دیکھنا ہے
٭٭٭
 
Comments


Login

You are Visitor Number :