rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Mushtaque Darbhangwi
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* مرے کانوں میں مصری گھولتا ہے *
مرے کانوں میں مصری گھولتا ہے
کوئی بچہ جب اردو بولتا ہے

بنایا تھا جسے ہمراز میں نے
وہی ہر راز میرا کھولتا ہے

خدا یاد آتا ہے تب ناخدا کو
بھنور میں جب سفینہ ڈولتا ہے

نکلتی تھی نہ بولی جس کے منہ سے
وہ اب اونچے سُروں میں بولتا ہے

جہاں کو چھوڑ دے حالت پہ اپنی
تو اتنا دردِ سر کیوں مولتا ہے

جھڑا کرتے ہیں پھول اُس کے لبوں سے
وہ جس دم غنچۂ لب کھولتا ہے

جو ہوتا ہے صداقت کا پیمبر
عدالت میں وہی سچ بولتا ہے

جو کل تک چن رہا تھا سنگریزے
وہ اب مشتاقؔ موتی رولتا ہے
*****************
 
Comments


Login

You are Visitor Number :