rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Shaharyar Jalalpuri
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* خوشبو کی طرح ہم شب مہتاب میں آئے *

غزل


خوشبو کی طرح ہم شب مہتاب میں آئے
جب تیری تمنا میں ترے خواب میں آئے

اے موج جنوں تو کسی ساحل پہ اتر جا
گر عشق مرا پھر کسی سیلاب میں آئے

کچھ نقش ابھر آئے تھے پانی کے بدن پر
ہم قوس و قزح بن کے اسی آب میں آئے

ہر ذہن مہکنے لگے پھولوں کی طرح سے
جب ذکر مرا حلقۂ احباب میں آئے

کچھ ایسے بھی گزرے ہیں شب و روز ہمارے
جیسے کوئی کشتی کسی گرداب میں آئے

شہر یار جلال پوری
موبائل:9451630555

 

 
Comments


Login

  • Mushtaque Darbhangwi
    15-11-2015 20:59:09
    Bahut khoob Shahr e yaar Sahab. Umda ghazal hai. Matla ka jawaab nahi.
You are Visitor Number : 513