donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Anwar Jalalpuri
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* شاداب و شگفتہ کوئی گلشن نہ ملے گا *

شاداب و شگفتہ کوئی گلشن نہ ملے گا 

دل خشک رہا تو کہیں ساون نہ ملے گا 

تم پیار کی سوغات لیے گھر سے تو نکلو 

رستے میں تمہیں کوئی بھی دشمن نہ ملے گا 

اب گزری ہوئی عمر کو آواز نہ دینا 

اب دھول میں لپٹا ہوا بچپن نہ ملے گا 

سوتے ہیں بہت چین سے وہ جن کے گھروں میں 

مٹی کے علاوہ کوئی برتن نہ ملے گا 

اب نام نہیں کام کا قائل ہے زمانہ 

اب نام کسی شخص کا راون نہ ملے گا 

چاہو تو مری آنکھوں کو آئینہ بنا لو 

دیکھو تمہیں ایسا کوئی درپن نہ ملے گا 

 

۸۸۸۸۸۸۸۸۸۸

 

 
Comments


Login

  • Farooq
    15-02-2018 23:20:35
    BUHAT ALLA
You are Visitor Number : 287