donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Shahid Jameel
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* گلشن میںغبارکھل رہے تھے *
غزل

گلشن میںغبارکھل رہے تھے
تم بھیڑمیںہم سے مل رہے تھے
پانی میں وہاں نشہ ساکچھ تھا
دودھارے جہاںپہ مل رہے تھے
شفاف گہرکے جوصدف تھے
ملبوس ِخباروگِل رہے تھے
گویائی تھی،آئی تھی،گئی تھی
ہم گونگے تھے، مستقل رہے تھے
تنہائی سے عشق ہوگیاتھا
ہربھیڑمیںمشتعل رہے تھے
٭٭٭
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 414