donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Shahid Jameel
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* غبار آنکھوں پہ یوں ہی چھا گیا ہے *
غزل

غبار آنکھوں پہ یوں ہی چھا گیا ہے
کہ تیری دید کا پَل آگیا ہے
چراغوں نے کچھ اتنی روشنی دی
سحر آئی تو دل گھبرا گیا ہے
ترے جلوئوں نے اتنی دیر کردی
نظر کا آئینہ پتھرا گیا ہے
تِرا قہ تو اب مشہور ہوگا
مری رسوائی سے ٹکرا گیا ہے
مری تنہائی میں اب کیا نہیں ہے
تیری یادوں کا موسم آگیا ہے
٭٭٭



 
Comments


Login

You are Visitor Number : 393