donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Shahid Jameel
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* زہر کا جسم قبائے لب تشنہ مانگے *
غزل

زہر کا جسم قبائے لب تشنہ مانگے
زندگی مجھ سے مرے حصے کا صدمہ مانگے
غم سے بے لاگ جو مسرور رہا برسوں تلک
زندگی آج وہی پھول سا چہرہ مانگے
دھوپ اُکتائی ہوئی پھرتی ہے سڑکوں سڑکوں
میرا کمرہ ہے کہ برسوں سے سویرا مانگے
چشم در چشم سسکتے ہوئیں جذبوں کا جُمود
یخ زدہ جسم بھڑکتا ہوا شعلہ مانگے
اے شبِ دشت غم یار کہیں سے تو جھلک
درد کا آسماں صرف ایک ستارہ مانگے
۔۔۔۔
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 408