donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Shahid Jameel
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* حسرت کی اوس تک نہیں اے آرزو کی آگ *
غزل

حسرت کی اوس تک نہیں اے آرزو کی آگ
جلتی ہے اور کس لئے میرے لہو کی آگ
بحرِ جنوں! ترا پسِ منظر بھی خوب ہے
ہر برف زارِ شوق میں اک جستجو کی آگ
ہاں مجھ میں کوئی سرد ہوا چلنی چاہئے
آوارہ پھر رہی ہے ترے رنگ و بو کی آگ
شاہد چراغ ساتھ نہ دیں گے تو کیا ہوا
روشن رکھے گی دل کو غمِ سرخ رو کی آگ
۔۔۔
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 427