donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Shahid Jameel
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* ہجر کی آنکھوں کے سب منظر دسمبر *
غزل

ہجر کی آنکھوں کے سب منظر دسمبر
اس کلنڈر میں ہے سالوں بھر دسمبر
دھوپ لی تتلی کے پیچھے دوڑتا ہے
چھوٹے بچوں کی طرح چھت پر دسمبر
برف باری ہے تو کیا محفوظ ہے دل
اُس کی خاموشی سے ہے بہتر دسمبر
ان نظاروں میں چھپا ہوں مجھ کو ڈھونڈو
برف، خواب، آواز، آنسو، ڈر، دسمبر
شام نارنجی دکھوں کی پھر کھڑی ہے
ہر نئے غم کا پرانا گھر دسمبر
۔۔۔۔
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 440