donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Shahid Jameel
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* ایک لرزتا لمحہ *
ایک لرزتا لمحہ

میرے
کچھ ممکن خوابوں کی
تجھ تک
کچھ نا ممکن لہریں
جیسے دھرتی امبر ٹھہریں
ممکن سے نا ممکن تک کے بیچ کی دوری
فقط ترے انکار کی
بے موسم مجبوری
تو کیا جانے
ہیرا کو
پتھر میں بدل جانے کے لئے ۔ بس
ایک لرزتا لمحہ ہی کافی ہوتا ہے!!
۔۔۔
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 354