donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Kaif Akrami
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* میرے آنسوؤں پہ نظر نہ کر، میرا شکو *
میرے آنسوؤں پہ نظر نہ کر، میرا شکوہ سن کے خفا نہ ہو
اسے زندگی کا بھی حق نہیں، جسے دردِ عشق ملا نہ ہو

یہ عنائتیں، یہ نوازشیں، میرے دردِ دل کی دوا نہیں
مجھے اس نظر کی تلاش ہے، جو ادا شاسِ وفا نہ ہو

تجھے کیا بتاؤں میں بے خبر، کہ ہے دردِ عشق میں کیا اثر
یہ ہے وہ لطیف سی کیفیئت، جو زباں تک آئے ادا نہ ہو

یہ شراب ریز حسیں گھٹا، جو ہے کیف نازشِ مئے کدہ
کسی تشنہ کام کی آرزو، کسی تشنہ لب کی دعا نہ ہو
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 394