donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Kaif Azimabadi
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* کون رکھے گا وقار عاشقی میری طرح *
غزل
کیف عظیم آبادی

کون رکھے گا وقار عاشقی میری طرح 
آپ کو سمجھا ہے کس نے زندگی میری طرح
مجھ کو سن لو ! میں غنیمت ہوں ابھی تک دوستو!
کون بخشے گا غزل کو نغمگی میری طرح
ہر نظر میں میں نے دیکھی بے وفائی کی چمک
کون اپنے گھر میں ہوگا اجنبی میری طرح
وہ جمال مہہ نہیں ہے اور نہ مہر نیم روز
نام کچھ بھی ہو مگر ہے آدمی میری طرح
اشک پی کر مسکرائے ہیں تمہاری بزم میں
پوچھ لو کس نے بجھائی تشنگی میری طرح
کس لئے دنیا سے کرتے ہو اندھیرے کا گلہ
تم بھی کر لو گھر جلا کر روشنی میری طرح
کیفؔ کیوں تلقین کی جاتی ہے مجھ کو ضبط کی
کس نے ہونٹوں پر سجائی ہے ہنسی میری طرح
٭٭٭
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 363