donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Khalid Masood Khan
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* حسن کی توپ کا گولا مارا تیرا ککھ نہ &# *
حسن کی توپ کا گولا مارا تیرا ککھ نہ رہے
تجھ پر گر جائے قطبی تارا تیرا ککھ نہ رہے

بنکنگ کونسل والے تیری ہر شے قرقی کر دیں
چڑھ جائے تجھ پر قرضہ بھارا تیرا ککھ نہ رہے

سردی اندر نہر کے بنے ساری رات کھلوتے
تو نہ آئی لایا لارا تیرا ککھ نہ رہے

دل کی چوری کے الزام میں پولیس کا چھاپہ پڑ جائے
پھڑیا جائے ٹبر سارا تیرا ککھ نہ رہے

ساری غزل سنا کر بھی نہیں ساڑا دل کا مُکیا
ساڈا ہے بس اکو ای نعرہ تیرا ککھ نہ رہے
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 313