donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Khalida Siddiqui
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* ہزار پہلو ترے ہیں لیکن ہر اک نظر می *
حمد

ہزار پہلو ترے ہیں لیکن ہر اک نظر میں نیا نیا ہے
ہر ایک شے میں وجود تیرا یہی حقیقت کا آئینہ ہے

زمیں سے لے کر ہے آسماں تک تری حکومت تری قیادت
یہ سب ہیں فانی تو ہی ہے باقی ، تو ابتدا ہے تو انتہا ہے

چمک ستاروں کو تونے بخشی قمر کو تونے کیا منور
زمین روشن ہوئی تجھی سے حدِ نظر تک تری ضیا ہے

ترے کرم کے ہیں فیض سارے یہ دشت و دریا حسیں نظارے
ہے ذرّہ ذرّہ میں حسن تیرا چمک دمک سب تری ادا ہے

تو جن و انساں ، ملک کا حاکم نظام تیرا سبھی پہ قائم
میں جی رہی ہوں ترے کرم سے یہ والہانہ تری عطا ہے

ہزار نعمت سے ہے نوازا حیات میری بنائی روشن
نبیؐ کی کملی ہو سر پہ میرے خدایا تجھ سے یہ التجا ہے

جو لوحِ محفوظ پر لکھا ہے وہ کلمہ ہم نے پڑھا ہے دل سے
ہے وحدہٗ لاشریک تو ہی یہی حقیقت تو خالدہ ہے

خالدہ صدیقی

76, Ashoka Vihar
Nagar Nigam Colony (Bhopal)
Mob: 9424455367 / 9229964882
بشکریہ ’’غزالانِ حرم‘‘ مرتب: مشتاق دربھنگوی
……………………………………
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 261