donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Khatir Ghaznavi
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* آنکھوں میں ہے منقوش نمی سی کئی دن س *
آنکھوں میں ہے منقوش نمی سی کئی دن سے
ہے تیری توجہ میں کمی سی کئی دن سے

کیوں جسم میرا کرب و بلا کا ہے لئے روپ
ان ہونٹوں پہ ہے برف جمی سی کئی دن سے

بے کیفیٔ حالات کا پرتو ہے یہ چہرہ
کچھ دل میں خوشی ہے نہ غمی سی کئی دن سے

بازار میں ہر سو ہیں سبیلیں میرے خوں کی
لگتی ہے یہاں مرگ تھمی سی کئی دن سے

رویا تھا لہو مرگِ انا سے تیرا خاطرؔ
چہرے پہ لکیریں ہیں جمی سی کئی دن سے
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 505