donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Khumar Barabankvi
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* کبھی جو میں نے مسرت کا اہتمام کیا *
کبھی جو میں نے مسرت کا اہتمام کیا
بڑے تپاک سے غم نے مجھے سلام کیا

ہزار ترکِ تعلق کا اہتمام کیا
مگر جہاں وہ ملے دل نے اپنا کام کیا

زمانے والوں کے ڈر سے اٹھا نہ ہاتھ مگر
نظر سے اس نے بصد معذرت سلام کیا

کبھی ہنسے کبھی آہیں بھریں، کبھی روئے
بقدرِ مرتبہ ہر غم کا احترام کیا

طلوعِ مہر سے بھی گھر کی تیرگی نہ گھٹی
ایک اور شب کٹی یا میں نے دن تمام کیا

دعا یہ ہے کہ نہ ہوں گمراہ ہم سفر میرے
خمار میں نے تو اپنا سفر تمام کیا
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 349