donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Khwaja Mir Dard
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* تجھ ہی کو جویا جلوہ فرما نہ دیکھا *
غزل

٭……خواجہ میر دردؔ

تجھ ہی کو جویا جلوہ فرما نہ دیکھا
برابر ہے دنیا کو دیکھا نہ دیکھا
مرا غنچہ دل ہے وہ دل گرفتہ
کہ جس کو کسی نے کبھی وا نہ دیکھا
اذیّت، مصیبت، ملامت، بلائیں
ترے عشق میں ہم نے کیا کیا نہ دیکھا
کیا مجھ کو داغوں نے سروِ چراغاں
کبھو تو نے آکر تماشا نہیں دیکھا
تغافل نے تیرے یہ کچھ دن دکھائے
ادھر تونے لیکن نہ دیکھا نہ دیکھا
حجابِ رُخِ یار تھے آپ ہی ہم
کھلی آنکھ جب، کوئی پروا نہ دیکھا
شب و روز اے دردؔ درپہ ہوں اس کے
کسو نے جسے یاں نہ سمجھا نہ دیکھا
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 348