donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Dr Javed Jamil
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* آپ اب ہو گئے جیسے کبھی ایسے تو نہ ت&# *

غزل


از ڈاکٹر جاوید جمیل
 
آپ اب ہو گئے جیسے کبھی ایسے تو نہ تھے
بے رخی  ہوتی تھی، بھولے کبھی ایسے تو نہ تھے
 
نخرے تو  پہلے بھی کرتا تھا مگر پل بھر کو
جان لیوا ترے نخرے کبھی ایسے تو نہ تھے
 
رہتے تھے وہ ہمہ تن گوش مری باتوں پر
آج کیوں ہو گئے بہرے، کبھی ایسے تو نہ تھے
 
پہلے معصوم وہ ہوتے تھے، اب آئی تیزی
جیسے اب ہو گئے بچے کبھی ایسے تو نہ تھے
 
راز کچھ ہوگا جو بدلہ ہے رویہ جاوید
ورنہ بھائی مرے اچھے کبھی ایسے تو نہ تھے
۸۸۸۸۸۸۸۸۸۸۸۸۸

 

 
Comments


Login

You are Visitor Number : 536