donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Adil Hayat
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* جب سے روٹھا ہے مجھ سے مرا آسماں *

 

غزل
 
جب سے روٹھا ہے مجھ سے مرا آسماں
ہے سفر زندگانی میں راحت کہاں
کس طرح سے بدلتا ہے موسم کا رنگ
تھیں بہاریں کہیں اور ہیں اب کہاں
سر چھپاؤں کہاں شہر بے جان میں
ہم نفس ہے کہاں اور کہاں آشیاں
آنکھ آگے مری تھا نہ منظر کوئی
راہ چلتے ملا بس دھواں ہی دھواں
گھر کے اندر ہے شور قیامت بہت
گھر کے باہر بھی ہے کیسی آہ و فغاں
اس کے حصّے میں آئی ہے تسکین دل
اور حصّے میں ہے میرے وہم و گماں
کوئی سورج بھی مدّ مقابل نہیں
سر پہ سایا بھی عادل کہاں
 
*************
 
 
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 358