donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Adil Hayat
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* خواہشیں دل کو بجھے بھی اک زمانہ ہو *

 

غزل
 
 
خواہشیں دل کو بجھے بھی اک زمانہ ہوگیا
بے بسی تجھ سے مرا رشتہ پرانہ ہوگیا
تھا بہت مشہور وہ اپنے ہنر کے رنگ میں
آج پھر اس سے خطا کیوں ہر نشانہ ہوگیا
آؤ پھر دل کی عبادت گاہ مشترکہ بنے
نفرتوں کے شہر میں آنسو بہانا ہوگیا
پیڑ کوئی کب خوشامد کا سمایا آنکھ میں
راہ چلتے دھوپ کا منظر سہانا ہوگیا
چھوڑ کر آیا ہے گھر کو جب سے عادل شہر میں
ہر کسی سے رشتہ اس کا تاجرانہ ہوگیا
 
*************
 
 
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 391