donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Adil Hayat
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* کس کا چہرہ ہے خیال و خواب میں *

کس کا چہرہ ہے خیال و خواب میں
مچ گئی ہلچل مرے اعصاب میں
مل گئی شائستگی اسلاف کی
چاہئے تھا اور کیا اسباب میں
اک دیا روشن مرے دل میں ہوا
اک دیا جلنے لگا محراب میں
داستاں خود کو سنائی تھی مگر
گفتگو ہونے لگی احباب میں
کشتیاں ساحل سے اپنے جالگیں
لوگ پھنس کر رہ گئے گرداب میں
دور سے ہی آگیا سب کو نظر
کرب سا کچھ چہرۂ شاداب میں
میری بھی تہذیب کے چرچے ہوئے
تھا سلیقہ اس کے بھی آداب میں
زندگی کو میں نے عادل پڑھ لیا
خوف سا لکھا تھا ہر اک باب میں

عادل حیات
Department of Urdu
Jamia Millia Islamia
New Delhi 110025
Mobile No.: 9313055400
Emai: adilhayat10@gmail.ocm


 

 
Comments


Login

You are Visitor Number : 252