donateplease
newsletter
newsletter
rishta online logo
rosemine
Bazme Adab
Google   Site  
Bookmark and Share 
design_poetry
Share on Facebook
 
Khalid Malik Sahil
 
Share to Aalmi Urdu Ghar
* حادثے پیار میں ایسے بھی تو ہو جاتے  *
حادثے پیار میں ایسے بھی تو ہو جاتے ہیں 
رتجگے خیمہء تسکین میں سو جاتے ہیں 
بعض اوقات ترا نام بدل جاتا ہے 
بعض اوقات ترے نقش بھی کھو جاتے ہیں 
چلتے چلتے کسی رستے کے کنارے پہ کہیں 
یاد کے پھول مسافت میں پرو جاتے ہیں 
تجھ کو دیکھا ہے تو آثار نظر آئے ہیں 
تجھ کو دیکھا ہے تو ماضی کو بھی رو جاتے ہیں 
ہم چلے جاتے اِس شہر کے جنگل سے کہیں 
تم ہمیں درد کی کچھ بھیک تو دو، جاتے ہیں
******
 
Comments


Login

You are Visitor Number : 309